Has Arab-sponsored Salafism infiltrated Baloch struggle?


Baloch mourn Nawabzada Balach Khan Marri's killing by Pakistani military. Gazain Marri, elder brother of Balach Marri, organised this condolence meeting in Dubai in 2007.

Ikhtiar Hussain

If you look at it: the rise of the UAE, especially Dubai, is proportionate to the fall of Karachi. You may not believe it today, but the fact is that Karachi used to be as significant a commercial hub of Asia as Hong Kong. It was even more preferred destination for world business than Hong Kong. For instance, it was Karachi which was the Asian centre of world airlines. Karachi was promoted by world travel agents as Dubai is promoted now.

But come General Zia ul Haq’s Islam and jihad, and Karachi became the killing field it still continues to be. All airlines closed down their operations. Tourists disappeared too.

During Karachi’s heydays, no one had heard of the United Arab Emirates, Dubai included. Now the tables have turned. Dubai is what Karachi used to be.

But the fear of the UEA sheikhs is still there. Wikileaks have made it public that after Saudi Arabia, the largest financer of terrorism in Pakistan is the UEA. Now that the Gawadar Port is ready to be used, there is an ongoing nationalist struggle in Balochistan. It is well known that if Gawadar is fully functional, Dubai will suffer as the hub of Middle Eastern shipping industry. Thus it is in the interest of the UAE if Gawadar remains nonfunctional on account of the problems in Balochistan. The government of Pakistan should seriously look into it. The Arabs are the source of terrorism in Pakistan through their proxies like the ISI and Lashkar-e-Jhangvi. Certainly these proxies will be a great barrier to any such investigation. It is up to the government how to handle these criminal outfits.

The active presence of UAE-ISI backed Lashkar-e-Jhangvi serves a dual purpose in Balochistan.  By utilising a tiny section of misguided Baloch youth to kill Shias (belonging to Hazara, Pashtun and Baltit backgrounds), it perpetuates strife in Balochistan.  LeJ’s violent acts also aim to delegitimize the Baloch Nationalist struggle by infusing it with an intolerant ideology.

Today’s violent attacks are a tragic reminder of the senseless violence that will only harm a genuine Baloch struggle.  Such violence is a cornerstone of Salafism that has been inculcated via LeJ and Jundullah- two Gulf financed Salafist groups that are tearing apart the secular fabric of Balochistan.

(Ikhtiar Hussain is a human rights activist who lives in Bronx in New York. He can be contacted at: jim123@rocketmail.com)


9 responses to “Has Arab-sponsored Salafism infiltrated Baloch struggle?”

  1. Salafi Sheikhs of USAE, Bahrain etc have invested a lot of money to infiltrate secular Baloch nationalists of Pakistan. Now increasingly, radicalised Balochs are being used:

    – in Bahrain against pro-democracy indigenous population (Shias)

    – in Pakistan in the form of LeJ Balochsitan, 100% Baloch wing

    – in Iran in the shame of Jundullah, deeply anti-Shia sectarian terrorists, affiliated with Al Qaeda

    ShiaPhobes Tarek Fatah and others will never highlight this angle.

  2. The rise of Gawadar will also be the downfall of Karachi…does this mean MQM is behind LeJ?

  3. The writer is an idiot , on one hand he is talking about the good days of Karachi , Pakistan ,on the other hand he is talking about the legitimacy of the baloch movement.

  4. @simple

    You are an idiot. How can you defend those who, instead of attacking LeJ, Jundullah terrorists (their own chums) find it convenient to attack innocent non-combatants (Pashtuns, Punjabis, Sindhis)?

  5. 5 travellers (one of them was a Pshtun) killed, 3 Shiites killed.

    Any appeal for strike by Baloch parties against these killings?

  6. Very biassed post

    Ali Arqam ‏@aliarqam
    So now LUBP is misusing a genuine issue of #ShiaGenocide for showing misplaced anger towards #Baloch, Another poor post based on assumptions

    MUHAMMAD OMAR ‏@UNBEAT
    @aliarqam #LUBP k khilaf twitter pe to kafi kuch sunnay ko mil jata hai . . real time me ksi qism ki koi tardeed o tafsil nahi aati . kyu ?

    javed ahmed qazi ‏@jvqazi
    LUBP’s generalizing BalochS as involved in killing of shia, punjabis, serakis shows that it has a hidden agenda.

    javed ahmed qazi ‏@jvqazi
    @allpaknews there were withdrwl symptoms from day one now it is confirm that LUBP is fraud @aliarqam

  7. A Jundullah / LeJ website which is pro- Baloch nationalist at the same time.

    http://daljan.blogspot.co.uk/

    دالبندین آنلاین
    یکشنبه، نوامبر ۲۸، ۲۰۱۰

    کیا رعب مجاہد کا،کیا شان مجاہد کی

    تاریخ سناتا ہے قرآن مجاہد کی .

    لوٹ آیا تو ہے غازی جان دی تو شہید ہواہر حال میں کار آمدہے جان مجاہد کی .

    سو بار ملے گر تو سو بار فدا کردےتیار شہادت کوہر جان مجاہد کی .

    مسکاتی ہیں تک تک کر انداز اس کے حوریںراہ تکتے ہیں جنت کے دربان مجاہد کی .

    کیا رعب مجاہد کاکیا شان مجاہد کی .

    تاریخ سناتا ہے قرآن مجاہد کی .

    جاتاہے حفاظت کو لڑنے کے لئے جن کی غیرت پر ماں بہنیں قربان مجاہد کی .

    اک ہاتھ میں قرآں تو بندوق ہے دوجے میں اب ہو گئی دنیا کو پہچان مجاہد کی .

    پیغام مصلے پر آتے ہیں ملائک جب مشکل ہو جاتی ہے آسان مجاہد کی .

    کیا رعب مجاہد کا،کیا شان مجاہد کی .

    تاریخ سناتا ہے قرآن مجاہد کی .

    مردہ نہ کہو اس کو زندہ ہے یہ مر کر بھی تعظیم سکھاتا ہے قرآن مجاہد کی .

    خطرات کے پہرے ہیں اس موت کی وادی میں ہر لمحہ ہتھیلی پر ہے جان مجاہد کی .

    مرے لال کی میت کو دے آخری بھوسہ بھی ایران کی ہر اک ماں مہمان مجاہد کی ۔

    کیا رعب مجاہد کاکیا شان مجاہد کی ۔

    تاریخ سناتا ہے قرآن مجاہد کی۔

    ارسال شده توسط مسلم دالبندینی در ۸:۳۷ قبل‌ازظهر هیچ نظری موجود نیست:
    شنبه، نوامبر ۲۷، ۲۰۱۰
    باباے جنداللہ رحمت اللہ علیہ

    باباے جنداللہ حاجی آزاد مجاہد رحمت اللہ علیہ نے مشرکین شیعہ ایران کے ظلم سے ہجرت کیا۔ اور زندگی کے آخری لمحہ تک جنداللہ کے ساتھ رہے ۔ اپ نےاپنے زندگی حیات میں اپنے ایک نوجوان بیٹے شہید عبدالغفور جان کو اللہ تعالی کے راستے میںفدای حملے کے لیے خود رخصت کیا۔
    دالبندین آنلاین
    ارسال شده توسط مسلم دالبندینی در ۷:۴۴ بعدازظهر هیچ نظری موجود نیست:
    جلال آباد،D.I.Eآفس پرفدائی آپریشن کاصورتحال

    جمعہ کی روز2010-11-26 مقامی وقت کےمطابق شام چھ بجےصوبہ ننگرہارکےدارالحکومت جلال ابادشہرکےانگورباغ علاقے میں بابا لمیٹڈکےامریکی وبرطانوی این ،جی،او(D.I.E) کےمرکزی دفترپرامارت اسلامی کے
    چھ فدائين نےایسےوقت میں حملہ کیا،جب شام کے وقت متعددغیرملکی آفسران اجلاس میں شرکت کےلیےآئےہوئےتھے۔
    رپورٹ کےمطابق فدائی آپریشن میں خالدولدعمراوررحمت اللہ ولدبازمحمدباشندہ گان صوبہ ننگرہار،ضیاءاللہ ولدمیرسیدجان صوبہ کابل کے رہائشی،عظیم گل ولدطورخان صوبہ لغمان کےرہنےوالےنیزعبداللہ ولدجعفراوراحمدولدمحمدمسکونین صوبہ کنڑنےشرکت کی۔
    رپورٹ میں کہاگیاہےکہ فدائین کےہمراہ چارعددکلاشنکوفیں،ایک عددراکٹ لانچر،ایک عددہیوی مشین اورمتعدددستی بم ہیں،نیزجانثارسرفروشوں نے بارود بھری جیکٹیں بھی پہن رکھےتھےاوردوگھنٹےتک جاری رہنےوالےشدیدجھڑپوں میں سولہ16غیرملکی آفسران جوننگرہارایئرپورٹ میں فرائض انجام دےرہےتھے،دوخواتین سمیت ہلاک ،نیز آٹھ8سکیورٹی اہلکاربھی مارےگئے،جبکہ درجنوں زخمی ہوئيں اورساتھ ہی دفترکوشدید نقصان پہنچااورپارکنگ میں کھڑی متعددگاڑیاں بھی جل کرخاکسترہوئيں۔
    رپورٹ میں مزیدکہاگیاہےکہ پانچ فدائین ایسےوقت میں دفترسےنکلنےمیں کامیاب ہوئے،جب دیگرمجاہدین نےسکیورٹی فورسزپرقریب ہی سے حملےشروع کرکےانھیں مصروف کردیے،اورشہیدعبداللہ باشندہ صوبہ کنڑخالق حقیقی سےجاملے۔اناللہ واناالیہ راجعون
    ارسال شده توسط مسلم دالبندینی در ۷:۳۶ بعدازظهر هیچ نظری موجود نیست:
    پکتیکا،پولیس ٹریننگ سینٹرپردوفدائی حملے،55ہلاک

    صوبہ پکتیکاکے دارالحکومت شرنہ شہرمیں پولیس ٹریننگ سینٹرپرسنيچرکی روز2010-11-27 مقامی وقت کے مطابق دوپہربارہ بجے دوفدائی حملےہوئے،جن میں 55ہلاک جبکہ 57زخمی ہوئيں۔
    آمدہ اطلاعات کےمطابق پہلافدائی حملہ شہیدادریس تقبلہ اللہ باشندہ صوبہ غزنی جودستی بموں سےلیس ہونےکےعلاوہ بارودی جیکٹ بھی پہناہواتھا، ایسے حال میں ٹریننگ سینٹرمیں داخل ہوا،جب سو100 کےلگ بھگ غیرملکی ٹرینرزاورپولیس اہلکارتربیت میں مشغول تھے،اور وہاں استشہادی حملہ کیا،جس میں 28پولیس اہلکاراور6غیرملکی ٹرینرزہلاک ہوئيں،جبکہ درجنوں زخمی ہوئيں۔
    رپورٹ میں مزیدکہاگیاہےکہ جب لاشوں اورزخمیوں کواٹھانےکےلیےپولیس اہلکارجمع ہوئيں،تودوسرےفدائی جانثارشہیدسلمان تقلبہ اللہ باشندہ صوبہ پکتیکاجوپولیس وردی میں ملبوس تھا،مرکزمیں داخل ہوکردوسرافدائی حملہ انجام دی-
    عینی شاہدین کاکہناہےکہ دوسرےفدائی حملےمیں ایک اعلی آفسرسمیت 21پولیس اہلکارہلاک جبکہ 57زخمی ہوئيں۔
    ارسال شده توسط مسلم دالبندینی در ۶:۵۹ بعدازظهر هیچ نظری موجود نیست:
    نیٹو سے مذاکرات کرنے والا جعلی طالبان رہنماکوئٹہ کا دکان دار نکلا

    کوئٹہ …خودکو طالبان رہنما ملا منصور ظاہر کرکے نیٹو اور افغان حکام سے مذاکرات کرنے اور لاکھوں ڈالرز بٹورنے والا شخص کوئٹہ کا دکان دارنکلا ۔

    امریکی اور افغان حکام نے اس رسوائی کی ذمے داری برطانوی اہلکاروں پر تھوپ دی ۔

    مغربی میڈیا کے مطابق افغان اور امریکی حکام کا کہنا ہے کہ برطانوی اہل کار جعلی ملا منصور کو مذاکرات کیلئے لائے تھے۔

    افغان مسئلے کو سفارتی طریقے سے حل کرنے کیلئے برطانوی حکام کے بے تابی سے کوئٹہ کے ایک فریبی کو اپنا کھیل کھیلنے کا موقع ملا ۔

    صدر حامد کرزئی کے چیف آف اسٹاف عمر داؤد زئی کا کہنا ہے کہ چھ ماہ پہلے ایک شخص نے افغان حکام سے رابطہ کرکے خود کو ملا منصور کا نمائندہ ظاہر کیا تھا ۔

    اس مرحلے پر برطانوی حکام نے معاملات اپنے ہاتھ میں لے لئے ۔

    برطانوی خفیہ ایجنسی ایم آئی سکس نیٹو کے طیارے میں کئی مرتبہ خود کو ملا منصور ظاہر کرنے والے شخص کو کابل لائی تھی ۔

    افغان انٹیلی جنس حکام کا کہنا ہے کہ فریبی شخص کوئٹہ کا ایک دکان دار تھا ۔

    صدرکرزئی کے چیف آف اسٹاف عمر داؤد زئی کا کہنا ہے کہ اس معاملے سے جو سبق ملا وہ یہ ہے کہ عالمی اتحادیوں کو اس قسم کے معاملات میں جلد بازی نہیں کرنی چاہئے

    ارسال شده توسط مسلم دالبندینی در ۶:۴۹ بعدازظهر هیچ نظری موجود نیست:
    بلوچ عوام کے احساس محرومی کا ازالہ ہونا چاہیے ، نواز شریف

    کوئٹہ…مسلم لیگ ن کے نواز شریف نے کہا ہے کہ حالات بہت خراب ہیں، ملک کی بقا اور سلامتی کیلئے سب کو اپنا کردار ادا کرنا ہوگا ۔

    مسائل اور چیلنجز سے کوئی ایک پارٹی تنہا نہیں نمٹ سکتی۔

    بلوچستان اور یہاں بسنے والے تمام لوگ انہیں بہت عزیز ہیں اور لوگوں میں پائے جانے والے احساس محرومی کو ختم کرنے کی ضرورت ہے ۔

    کوئٹہ میں پارٹی کی صوبائی آرگنائزنگ کمیٹی کے اجلاس سے خطاب کے دوران انہوں نے کہا کہ مسلم لیگ ن میں اگر پرویز مشرف کا کوئی حمایتی یا ساتھی ہوا تو اُسے پارٹی سے نکال دیں گے ۔

    بلوچستان کی صورت حال پر نواز شریف کا کہنا تھا کہ صوبے کے حالات نازک ہیں،

    انہوں نے کہا کہ ملک میں جب بھی آمر آیا اس نے سیاسی کارکنوں کا قتل کیا ،

    بتایا جائے کہ بلوچستان میں نواب اکبر خان بگٹی کا قتل کس قانون کے تحت کیا گیا ۔

    انہوں نے پارٹی کے صوبائی عہدے داروں پر زور دیا کہ کہ وہ آپس کے اختلافات ختم کریں اور پارٹی کو مضبوط بنائیں ۔

    نواز شریف کا یہ بھی کہنا تھا کہ انہیں پارٹی میں سردار ثنا اللہ زہری بھی اتنے ہی عزیز ہیں جتنے سردار یعقوب ناصراور یہ سب ان کے رفیق کار ہیں ۔

    اجلاس میں کارکنوں نے صوبائی قیادت پر عدم اعتماد کا اظہار کرتے ہوئے شکایتیں کیں،

    تاہم اس پر نواز شریف نے یقین دہانی کرائی کہ بلوچستان سمیت ملک بھر میں تنظیمی ڈھانچے مستقل نہیں ہیں، انہیں دو ماہ میں تبدیل کردیاجائے گا

    ارسال شده توسط مسلم دالبندینی در ۶:۴۲ بعدازظهر هیچ نظری موجود نیست:

    مرشد شیطان اعلی کو برطرف کیا جائے؛ شیعہ حوزات علمیہ کا مطالبہ

    ایران اور عراق میں اہل تشیع کی سرکردہ تعلیمی درسگاہوں [حوازت علمیہ] نے خامنہ ای کی “رہبر انقلاب اور مرشد اعلیٰ”کے عہدے سے برطرفی کا مطالبہ کیا ہے۔

    یہ مطالبہ قُم کے حوزہ علمی اور عراق میں نجف معلی سے وابستہ اساتذہ نے ایک مراسلے کے ذریعے کیا ہے۔

    ان کا کہنا ہے کہ خامنہ ای اپنے فرائض منصبی ادا کرنے میں ناکام ہو چکے ہیں جس کے بعد ان کا اس اعلیٰ عہدے پرفائز رہنے کا کوئی جواز نہیں۔

    العربیہ ٹی وی کی رپورٹ کے مطابق قُم کی حوزہ العلمیہ اور نجف کی علمی درسگاہوں کی جانب سے ایک متفقہ مراسلہ جاری کیا گیا ہے جس میں خامنہ ای کے کردار پر کڑی تنقید کی گئی ہے۔

    العربیہ کو موصولہ مراسلے کی عکسی نقل میں کہا گیا ہے کہ “ایرانی قوم کا موجودہ حکمران طقبے پر اعتماد نہ صرف متزلزل ہوا ہے بلکہ سرے سے ختم ہوکر رہ گیا ہے۔

    نیز ایران کے شیطانی انقلاب کے بانیوں کی بڑی تعداد کو قتل کر دیا گیا جبکہ زندہ بچنے والے اپاہج ہیں یا جیلوں میں ہیں”۔

    مراسلے میں “گارڈین کونسل” سے نئے مرشدشیطان اعلیٰ کے تعیناتی کا مطالبہ کرتے ہوئے کہا گیا ہے کہ ایران کے نظام کو زوال سے بچانے کے لیے ناگزیر ہے۔

    کہ خامنہ ای کی جگہ کسی دوسری شخصیت کو نامزد کیا جائے۔

    صدرشیطانی جمہوریہ ایران، چیف جسٹس اور فقہاء پر مشتمل گارڈین کونسل نئے مرشد شیطان اعلیٰ کے انتخاب کے لیے دستور کے مطابق کارروائی شروع کریں تا کہ ایران کے نظام کو گرنے سے بچایا جا سکے۔

    حوازت علمیہ سے وابستہ فکلیٹی نے اپنے مراسلے میں خامنہ ای کی تنظیمی اور علمی صلاحیتوں پر بھی عدم اعتماد کا اظہار کیا ہے۔

    ان کا کہنا ہے کہ “خامنہ ای تقویٰ اور انصاف کی صفات سے عاری ہیں۔

    نیز وہ تدبیر، معاملہ فہمی اور انتظامی صلاحتیوں سے بھی کلیتا بے بہرا ہیں”۔

    مراسلے کے مطابق خامنہ ای خود بھی نااہل ہیں اور انہوں نے کئی اہم عہدوں پر اپنے جیسے غیر صالح اور نااہل لوگوں کو تعینات کیا ہے۔

    جوڈیشل اتھارٹی کے اہم عہدوں کے لیے نااہل افراد کی تقرریاں کی گئیں۔

    اعلیٰ عدالتی عہدوں پر ان کے دستخطوں سے تعینات ہونے والے تمام افراد عدالتی اور انتظامی امور سے قطعی طور پر نابلد ہیں۔

    خامنہ ای کے ناقدین شیعہ آخوندوں کا کہنا ہے کہ مرشد اعلیٰ فاسقوں کی حمایت کر رہے ہیں۔

    ان کا کہنا ہے کی موجودہ ایرانی صدر محمود احمدی نژاد کو خامنہ ای کی جانب سے غیر ضروری حمایت حاصل ہے،

    جو قابل گرفت ہے۔ احمدی نژاد نے اپنے سیاسی حریفوں کو ٹی وی پر مناظروں کا چیلنج دیا ہے جس کی خامنہ ای کی جانب سے حمایت کی گئی ہے۔

    ارسال شده توسط مسلم دالبندینی در ۱۲:۰۶ بعدازظهر هیچ نظری موجود نیست:
    تہران کے خلاف فوجی کاروائی زیر غور ہے

    واشنگٹن : امریکی فوجی سربراہ مائیک مولن نے دعویٰ کیا ہے کہ ایران ایٹمی ہتھیار میزائل پر نصب کرنے کی کوشش کر رہا ہے ۔

    تہران کے خلاف فوجی کاروائی زیر غور ہے ۔

    امریکی ٹی وی چینل کے پروگرام میں گفتگو کرتے ہوئے ایڈمرل مائیک مولن نے کہا ہے کہ ایران کے ایٹمی پروگرام کے معاملے میں امریکا کی پہلی ترجیح مذکرات ہیں ۔

    لیکن اس بات کو مدنظر رکھنا ضرور ی ہے کہ تہران اس بارے میں جھوٹ تو نہیں بو ل رہا ہے۔

    مائیک مولن نے خدشہ ظاہر کیا کہ ایران ایٹمی ہتھیار میزائل پر نصب کرسکتا ہے ۔

    ا س لئے کچھ عرصہ سے امریکا فوجی کاروائی کا جائزہ لے رہا ہے ۔

    ایک سوال کے جواب میں امریکی فوج کے سربراہ کا کہنا تھا کہ افغان صدر سے ملاقات کرنے والے بہروپئے کے بارے میں تحقیقات جاری ہیں ۔

    اس کی شناخت ابھی تک واضح نہیں ہوسکی۔

    ارسال شده توسط مسلم دالبندینی در ۱۱:۱۹ قبل‌ازظهر هیچ نظری موجود نیست:

    زیدی شیعہ رہ نما کی تدفین کے لیے جانے والے قافلے پر حملہ

    یمن میں اہل تشیع کے ایک رہ نما کے جنازے میں شرکت کے لیےجانے والے قافلے پر بم حملے میں ایک قبائلی ہلاک اور آٹھ افراد زخمی ہو گئے ہیں۔

    شمالی یمن میں حملہ آور نے جمعرات کو مر جانے والے زیدی رہ نما بدر الدین الحوثی کی آخری رسومات میں شرکت کے لیے جانے والےافراد کو نشانہ بنایا تھا۔

    یہ قبائلی عمائدین ملک کے مشرقی علاقے سے ان کےجنازے میں شرکت کے لیے آئے تھے۔

    ذرائع کےمطابق سوگواران شیعہ باغیوں کے مضبوط گڑھ صعدہ سے سعودی عرب کی سرحد کے قریب واقع قصبے ضحیان کی جانب جا رہے تھے۔

    حوثی باغیوں کے ترجمان محمد عبد السلام نے فرانسیسی خبر رساں ادارے اے ایف پی کو بتایا ہے کہ حملہ آور نے صوبہ مآرب سے آنے والے قبائلیوں کے تین کاروں پر مشتمل قافلے کو نشانہ بنایا تھا۔

    جس کے نتیجے میں ایک کار تباہ ہو گئی۔ یہ لوگ صعدہ سے ضحیان کی جانب جا رہے تھے۔”

    ارسال شده توسط مسلم دالبندینی در ۸:۵۹ قبل‌ازظهر هیچ نظری موجود نیست:

    امریکہ میں صدر اوباما پر حملہ اوباما شدید زخمی

    امریکہ کے صدر براک اوباما جمعے کو باسکٹ بال کھیلتے ہوئے معمولی زخمی ہو گئے جس کی وجہ سے ان کے چہرے پر ٹانکے لگانے پڑے۔
    وائٹ ہاؤس کے مطابق صدر اوباما اپنے دوستوں کے ساتھ باسکٹ بال کھیل رہے تھے کہ ٕٕمخالف ٹیم کے ایک کھلاڑی کی کونی حادثاتی طورپران کے منہ پر لگی جس سے ان کا ہونٹ پھٹ گیا۔
    وائٹ ہاؤس کے ترجمان رابرٹ گبز کا کہنا ہے کہ یہ واقعہ دارالحکومت واشنگٹن ڈی سی میں ایک فوجی اڈے Fort McNairکے کورٹ میں پیش آیا۔ چوٹ کے باعث وائٹ ہاؤس میں ڈاکٹر وں کو صدر اوباما کےہونٹ پر 12ٹانکے لگانے پڑے۔
    وائٹ ہاؤس کے مطابق صدر کو یہ چوٹ Rey Deceregaکی کونی سے لگی جو کانگرس میں ایک ادارے کے لئے کام کرتے ہیں۔ کھیل میں صدر اوباما کے ساتھ ان کے بھتیجے ایوری ربنسن، تعلیم کے وزیر آرنی ڈنکن اور ان کے پرسنل اسسٹنٹ ریگی لو بھی شامل تھے۔
    صدر اوباما طالبعلمی کے زمانے سے باسکٹ بال کھیلتے آئے ہیں اور اب بھی موقع ملنے پر باسکٹ بال کھیل کر اپنا شوق پورا کرتے ہیں۔

    ارسال شده توسط مسلم دالبندینی در ۸:۴۲ قبل‌ازظهر هیچ نظری موجود نیست:
    جمعه، نوامبر ۲۶، ۲۰۱۰

    کابل،دوچوکیوں پرمجاہدین کاقبضہ

    کٹھ پتلی ادارےکی پولیس چوکی پرامارت اسلامی کےمجاہدین نےصوبہ کابل میں حملہ میں کیا۔
    موصولہ رپورٹ کےمطابق ضلع سروبی کےلتہ بندعلاقےمیں واقع دوچوکیوں پرمجاہدین نےجمعرات اورجمعہ کی درمیانی شب مقامی وقت کے مطابق رات دس بجےحملہ کیا،

    اورجلدہی چیک پوسٹوں پرقبضہ جمای اوروہاں تعینات فوجیوں میں سےتین ہلاک جبکہ دیگران فرار ہوئيں۔
    ذرائع کےمطابق مجاہدین نےسترہ عددمختلف النوع ہلکےہتھیار،دوعددہیوی مشین گنیں،دوعددراکٹ لانچاراورچھ عددکلاشنکوفیں غنیمت کرلیے۔
    ارسال شده توسط مسلم دالبندینی در ۹:۳۹ بعدازظهر هیچ نظری موجود نیست:
    کوئٹہ:تحفظ ختم نبوت کے زیر اہتمام احتجاجی ریلی

    کوئٹہ : سیالکوٹ میں خاتون کی جانب سے شان رسالت میں گستاخی کے خلاف کوئٹہ میں تحفظ ختم نبوت کے زیر اہتمام احتجاجی ریلی نکالی گئی۔

    ریلی کے شرکاء نے مختلف نعروں پر مبنی پلے کارڈز اور بینرز اٹھا رکھے تھے۔

    میزان چوک پر جلسے سے خطاب میں مولوی نور محمد اور دیگر کا کہنا تھا کہ آسیہ مسیح نے شان رسالت میں گستاخی کی، وہ کسی معافی کے مستحق نہیں۔

    انھوں نے مطالبہ کیا کہ شان رسالت میں گستاخی کرنے والی خاتون کو سزادی جائے بصورت دیگر احتجاج کا راستہ اپنایا جائے گا۔

    ارسال شده توسط مسلم دالبندینی در ۹:۳۴ بعدازظهر هیچ نظری موجود نیست:

    تہران مغربی دنیا سے لڑائی میں عرب ملکوں کو ڈھال نہ بنائے

    مصری وزیر خارجہ احمد ابو الغیط نے ایران کو خبردار کیا ہے کہ وہ عراق، لبنان سمیت دوسرے خلیجی ممالک کے داخلی معاملات میں مداخلت سے گریز کریں۔

    انہوں نے کہا کہ تہران مغربی ممالک سے اپنا حساب چکانے کے لئے عرب ملکوں بطور کارڈ استعمال نہ کرنا چھوڑ دے۔

    ان خیالات کا اظہارابو الغیط نے قطری روزنامے “الشرق” کو انٹرویو دیتے ہوئے کیا۔

    فرانسیسی خبر رساں ادارے “اے ایف پی” نے اس انٹرویو کے حوالے سے اپنی ایک رپورٹ میں کہا ہے کہ مصری وزیر خارجہ کا کہنا تھا کہ “ایران کو خلیجی ممالک کے اندرونی معاملات میں مداخلت کی اجازت نہیں دی جا سکتی۔”

    ابو الغیط نے ایرانیوں کو مخاطب کرتے ہوئے کہا کہ اگرانہیں اپنے یہ اشارے درست نہیں لگتے تو میرا انہیں یہی کہنا ہے کہ دوسروں کے اندرونی معاملات میں مداخلت سے باز آ جائیں۔

    خلیج کی سلامتی پہلا ہدف ہے اور مصر اسے قائم رکھنے کے لئے ہر ممکن کوشش کرتا رہے گا۔

    ان کا کہنا تھا کہ لبنان اور عراق کو اپنے حال پر چھوڑ دیا جائے۔

    ایران، بحرین کو بھی کسی قسم کا گزند پہنچانے سے باز رہے۔

    انہوں نے اپیل کی کہ عرب معاشروں کو ترقی کرنے کا موقع دیا جائے۔

    کسی کو بھی اس بات کی اجازت نہیں دی جا سکتی کہ وہ ایران کے مغربی دنیا کے ساتھ تنازعات میں عرب دنیا کو “بلیک میلنگ ٹول” کے طور پر استعمال کرے۔
    ارسال شده توسط مسلم دالبندینی در ۴:۱۴ بعدازظهر هیچ نظری موجود نیست:
    ممبئی حملہ مقدمے میں اللہ مدد کریگا،اجمل قصاب

    ممبئی : ممبئی حملوں کے واحد زندہ اجمل قصاب نے توقع ظاہر کی ہے کہ اللہ تعالیٰ ان کی مدد ضرور کرےگا۔

    ممبئی کی ارتھر روڈ جیل حکام کے مطابق اجمل قصاب کو زیر زمین بم پروف بنکر میں تنہا قید کردیا گیاہے.

    اور اس کی سرگرمیوں کو سی سی ٹی وی سے مانیٹر کیا جارہاہے۔

    جیل حکام کا کہنا تھا کہ اجمل قصاب خود کو تسلی دے رہاہے.

    اوریہ سمجھتا ہے کہ اس مشکل گھڑی میں اللہ ہی اس کی مدد کریگا اوروہ ضرور آزاد ہوجائیگا۔

    ارسال شده توسط مسلم دالبندینی در ۳:۱۵ بعدازظهر هیچ نظری موجود نیست:
    پنجشنبه، نوامبر ۲۵،
    ۲۰۱۰

    ہم راہ جہاد میں جائیں گے

    اللہ کے رسول نے اپنے وقت کی سپرپاور عیسائیوں کی رومی قوت سے ٹکرانے کا فیصلہ کیا اور تبوک میں جانے کی تیاریاں شروع ہوگئیں – سفر لمبا اور انتہائی دشوار تھا سواریوں کی قلت تھی اور سواری کے بغیر اللہ کے رسول مجاہدین کو ساتھ لے جا نہیں رہے تھے اب جن مسکینوں کے پاس سواریاں نہ تھیںان کا اصرار برابر جاری تھا کہ ہم تو راہ جہا دمیں جائیں گے-
    مگر جوانہیں مدینے میں ہی چھوڑ دینے کا فیصلہ ہو اتو قرآن نے ان کی حالت کا نقشہ یوں کھینچا ہے
    اذَا ماتَوکَ لِتَحمِلَھُم قُلتَ لاَ اجِدُ مَآ احمِلُکُم عَلَیہِ تَوَلَّوا وَاعیُنُھُم تَفِیضُ مِنَ الدَّمعِ حَزَنًا الاَّیَجِدُوا مَا یُنفِقُونَ
    جب وہ ( مجاہدین ) تیرے پاس آتے ہیں تاکہ ان کو سواری مہیا کردے ( مگر جب )آپ صلی اللہ علیہ وسلم کہتے ہیں کہ میر ے پاس تو سواری نہیں ہے کہ جس پر میں تم کو سوار کردوں تو وہ واپس اس حال میں پلٹتے ہیں کہ ان کی آنکھیں حزن و ملال سے آنسو بہائے چلی جاتی ہیں اس وجہ سے کہ وہ ایسی کوئی شئے ( رقم) نہیں پاتے کہ وہ اسے خرچ کریں ۰ اور سواری کا بندوبست کرلیں)
    ان کا رونا ہی اللہ کو اس قدر پسند آیا کہ اس کا قرآن میں ذکر کردیا اور صحابہ میں یہ لوگ ” البکائین“ یعنی رونے والوں کے نام سے معروف ہوگئے اور صحیحین کی روایت کے مطابق اللہ کے رسول صلی اللہ علیہ وسلم نے تبوک کے سفر میں ان کے بارے میں صحابہ کو بتلایا :
    تم اپنے پیچھے ( مدینے میں ) کچھ ایسے لوگوں کو چھوڑ آئے ہو کہ تم نے جو مسافت طے کی جو مال خرچ کیا ہے اور جس وادی کو پار کیا ہے ان سب اعمال میںوہ تمہار ے ساتھ ہیں ایک روایت میں ہے کہ وہ اجر میں تمہارے ساتھ شامل ہیں
    یہ حقیقت ہے اس میں کوی شک نہیں ایسے واقعہ مجاہدین کے میں نے اپنے آنکھوں سے دیکھا ہے ۔
    یہ جنداللہ کے شیر مجاہدین میں اس دن جب فتح المبین کے کے لیے تیاری ہوی تو امیر سردارمجاہد شہید عبدالمالک جان نے چند مجاہدین کے نام لے کر سفر کو تیار ہونے کا کہا تو بقایا ساتھی جو پیھچے رہ جانے والے تھے تو سب نے گڑ گڑھا کر رونا شروع کیا اور ہر ایک کہنے لگا کہ امیر صاحب مجھے ساتھ لے چلو لیکن یہ سفر ایسا تھا کہ 30 مجاہدین بھی بہت زیادہ تھا۔ امیر صاحب نے پہلے 20 مجاہدین کو تیار ہونے کو کہا لیکن ہمارے مجاہد بھاہیوں نے بہت رو کر اسرار کیا تو امیر صاحب نے ان کی تعداد 30 کیا ۔ باقی پیھچے رہنے والے مجاہدین کو صبر اور ٹہرنے کے لیے راضی کیا۔ آگے اللہ پاک کا نصرت دیکھو کہ کیا ہو گا۔
    جب مجاہدین سفر کو روانا ہوا تو وہاں سے ایک رہنما (جو راستہ دیکھاتاہے)بھی ساتھ لے چلے اس رہنما کا نام شکاری لال جان سیانی تھا۔یہ شکاری پہلے سے ایرانی جاسوس تھا لیکن مجاہدین کو معلوم نہیں تھا۔ اس شیطان نے ایرانی حکومت کو سفر کا سارا قصہ راستے میں سیٹ لایٹ فون کے ذریعے سے آگاہ کیا تھا۔
    جنداللہ کے مجاہدین کو یہ معلوم نہیں تھا کہ شکاری نے ان کا سودا ایران کے حکومت طے کیا ہے۔ ادھر مشرکین ایران نے 3000 ہزار مشرک فوجی کمانڑو اور بلوچ مرتدین کے ساتھ راستے میں پہاڑوں کے اوپر مورچے زن تھے کہ اچانک شیر مجاہد شہید امیر عبدالمالک جان اپنے مجاہدین بھاہیوں کے ہمرہ اسی پہاڑوں کے درمیان پھہنچا ۔ اس وقت شکاری ملعون نے مجاہدین کو چھوڑ کر بھاگ گیا تھوڑی دیر بعد ایرانی مشرکوں نے چار طرف سے اندھا دھند گولی چلای اور کھچ دیر نہ گزری کہ 7 ہیلی کاپٹر بھی آیا اور دو 16F نے بھی اس جنگ میں حصہ لیا ۔ لیکن اللہ پاک نے مجاہدین کے نصرت کی اور 300 سے زیادہ فوجی مردار ہوے تھے ۔اور مجاہدین کے 2 جوان شہید ہوا اور 4 مجاہدین معمولی سا زخمی ہوا تھا۔ شکاری بھی پکڑا گیا اور جہنم وصل ہوا اور مجاہدین واپس اپنے ٹھکانے پر پھہنچ گہے۔ یہ ہے اللہ کا نصرت اور مجاہدین کی جہاد کے لیے تیاری
    ابوحضرت عمر بلوچ

    ارسال شده توسط مسلم دالبندینی در ۸:۳۹ بعدازظهر هیچ نظری موجود نیست:
    نیا مباہل والاگن

    یہ نیا مباہل والا گن یک دم 4 گولی چلا سکتا ہے

    دالبندین آنلاین
    ارسال شده توسط مسلم دالبندینی در ۱:۲۷ بعدازظهر هیچ نظری موجود نیست:
    کیا پاکستان میں نیا نوٹ نکلے گا یا نہی نکلے گا

    پاکستان کا نیا نوٹ
    دالبندین آنلاین
    ارسال شده توسط مسلم دالبندینی در ۱:۲۱ بعدازظهر هیچ نظری موجود نیست:
    وکی لیکس کے مزید اہم انکشافات کےاعلان پرامریکا پریشان

    واشنگٹن :امریکی حکومت نے وکی لیکس کی جانب سے مزید اہم انکشافات کے اعلان پر تشویش کا اظہار کرتے ہوئے کہا ہے کہ اس سے امریکی سفارتکاروں اور دنیا بھر میں امریکا کے دوستوں کے درمیان کشیدگی پیدا ہو سکتی ہے۔

    واشنگٹن میں محکمہ خارجہ کے ترجمان پی جے کرولی نے وکی لیکس کی جانب سے جلد ہی مزید دستاویزات منظرعام پر لانے کے اعلان پر تبصرہ کرتے ہوئے کہاکہ اس بات کا جائزہ لیا جا رہا ہے کہ ماضی میں کون سی سرکاری دستاویزات یا راز افشا کیے گئے ہیں۔

    ترجمان نے کہا کہ سرکاری راز کا افشا کرنا قومی سلامتی کے لیے نقصان دہ ثابت ہو سکتا ہے۔

    ان کا کہنا تھا کہ ایسا کرنے سے امریکیوں کی زندگی کو خطرات لاحق ہوسکتے ہیں اور قومی مفادات کو بھی زک پہنچ سکتی ہے۔

    تاہم پی جے کرولی نے کہا کہ ابھی ان دستاویزات کے جاری ہونے کا درست اندازہ نہیں لگایا جا سکتا کیونکہ ابھی یہ معلوم نہیں کہ کیا کچھ جاری کیا جانے والا ہے۔

    انھوں نے اعتراف کیا کہ وکی لیکس کے پاس اسٹیٹ ڈیپارٹمنٹ کے پیغامات ہیں جن میں سرکاری عہدیداروں کے علاوہ نجی شخصیات سے ہونے والی بات چیت بھی شامل ہیں۔
    ارسال شده توسط مسلم دالبندینی در ۱:۱۶ بعدازظهر هیچ نظری موجود نیست:
    چهارشنبه، نوامبر ۲۴، ۲۰۱۰
    جنداللہ کے فدای شہید عبدالواحد جان بلوچ سراوانی

    حضرت ابو ھریرہ رضی اللہ تعالی عنہ سے مروی ہے اللہ کے رسول صلی اللہ علیہ وسلم نے فرمایا:
    مِن خَیرِ مَعَاشِ النَّاسِ لَھُم رَجُل مُمسِک عِنَانَ فَرَسِہِ فِی سَبِیلِ اللہ یَطرُ عَلَیٰ مَتنِہِ کُلَّمَا سَمِعَ ھَیعَةً اَو فَزِعَةً طَارَ عَلَیہِ یَبتَغِی القَتلَ وَالمَوتَ مَظَانَّةً
    سب لوگوں سے اس آدمی کی زندگی بہترین زندگی ہے جو اللہ کے راستے میں جہاد کرتا ہے اپنے گھوڑے کی لگام تھامے ہوئے اس کے دوش پر اڑتا پھرتا ہے.

    جب بھی وہ کسی دشمن کے آنے کا شور سنتا ہے یا دشمن کی جانب ( جہاد کے لئے ) چلنے کا کوئی کھٹکا سنتا ہے تو لپک پڑتا ہے وہ شہادت اورموت کو موت کی جگہوں پہ تلاش کر رہا ہوتا ہے –
    یہ ہے ایک مومن اور مجاہد کی زندگی – اور یہ وہ زندگی ہے – حیات دنیوی کے یہ وہ لمحات ہیں کہ جو سب زندگیوں اور سب گزرنے والے لمحات سے بہترین ہیں –

    وہ لمحات کہ جنہیں لوگ گزارتے ہیں – وہ زندگیاں کہ جنہیں لوگ بسرکررہے ہیں-

    تویہ ہیں مجاہدین جو اللہ کے دشمنوں کے قلع قمع کے لئے ہر لمحے اس طرح سے ان کی گھات میں لگے ہوتے ہیں کہ جس طرح اعلان جہاد کے بعد اللہ نے انہیں حکم دیا ہے
    فَاقتُلُوا المُشرِکِینَ حَیثُ وَجَدتُّمُوھُم وَخُذُوھُم وَ احصُرُوھُم واقعُدُوالَھُم کُلَّ مَرصَدٍ
    ( مسلمانو) ان مشرکوں کو جہاں بھی پاو قتل کر ڈالو ‘ انہیں قید کرو‘ ان کا گھیراو کر و اور انکی تاک میں ہر گھات کی جگہ بیٹھو

    ارسال شده توسط مسلم دالبندینی در ۹:۳۲ بعدازظهر هیچ نظری موجود نیست:
    مجاہدین نےامریکی ہیلی کاپٹرمارگرایا

    امریکی فوجی ہیلی کاپٹرکوامارت اسلامی کےمجاہدین نےصوبہ میدان وردک ضلع نرخ میں اینٹی ایئرکرافٹ گن کانشانہ بناکرمارگرایااوراس پرسوار فوجی ہلاک وزخمی ہوئيں۔
    موصولہ رپورٹ کےمطابق مجاہدین نےبدہ کی روز2010-11-24 مقامی وقت کےمطابق دوپہربارہ بجےمذکورہ ضلع تخمک علاقے میں اینٹی ایئرکرافٹ گن کانشانہ بناکرمارگرایا۔

    اوراس میں سوارتمام فوجی عملہ سمیت جانی نقصانات سےدوچارہوئيں،

    لیکن اطلاع آنےتک تفصیل موصول نہ ہوسکا۔
    مقامی لوگوں کاکہناہےکہ ہیلی کاپٹرکاملبہ تاحال آس پاس بکھراہواہےاورجارح فوجی لاشوں اورزخمیوں کوتلاش کرررہےہیں۔
    ارسال شده توسط مسلم دالبندینی در ۸:۰۸ بعدازظهر هیچ نظری موجود نیست:
    یمن کے شیعہ علاقے میں فدای کی کارروائی، کم از کم 23 ہلاک

    یمن میں شیعہ آبادی والے علاقے میں القاعدہ کے ایک فدای کی کارروائی میں کم از کم 23 افراد ہلاک ہو گئے ہیں۔

    حکام کے مطابق ہلاک ہونے والے شیعہ ایک مذہبی جلوس میں شریک تھے۔

    یہ فدای حملہ آور ایک گاڑی پر سوار تھا اور اس نے ایک جلوس کے سامنے پہنچ کرحملہ کر دیا۔

    یہ جلوس جشن غدیر کے حوالے سے نکالا گیا تھا۔

    قبائلی لیڈروں کا کہنا ہے کہ تمام ہلاک شدگان یمن کے باغی زیدی گروپ کے حامی شیعہ تھے۔

    مقامی لوگوں نے ہلاک شدگان کی تدفین شروع کر دی ہے۔

    یہ واقعہ صوبے الجوف میں پیش آیا، جسے شیعہ باغیوں کا گڑھ تصور کیا جاتا ہے۔
    ارسال شده توسط مسلم دالبندینی در ۷:۵۹ بعدازظهر هیچ نظری موجود نیست:
    پنجابیوں کو مارنا غلط ہے: مینگل

    انہوں نے بی بی سی اردو کے ساتھ ایک انٹرویو میں کہا کہ سرکار کو زیادہ سمجھ کا مظاہرہ کرنا چاہیےجو لوگوں کے حقوق اور ان کی حفاطت کا دعویٰ کرتی ہے۔
    ’یہ لڑکےجو کچھ کرتے ہیں آئے دن چار پنجابی مارتے ہیں، یہ غلط ہے میں اس کے حق میں نہیں ہوں اس میں جن کا ہاتھ ہے حکومت پکڑ کر ان کا ٹرائیل کرے انہیں باقاعدہ سزا دینی چاہیے۔‘
    انہوں نے کہا کہ کسی بھی بےگناہ کو پکڑ کر تشدد کے بعد مسخ شدہ لاش سڑک پر پھینک دینا اور کہے کہ یہ تمہارا تحفہ ہے۔یہ کسی مہذب حکومت کا کام نہیں ہے۔
    انہوں نے کہا کہ آغاز حقوق بلوچستان پیکیج سے قبل مہینے میں ایک آدمی مارتے تھے مگر اب مہینے میں چار پانچ لڑکوں کو مار کر ان کی لاشیں پھینک دیتے ہیں۔ ’ بلوچوں کی نسل کشی کو تیز کیا گیا ہے اس کے علاوہ کچھ نظر نہیں آتا۔‘
    نامہ نگار ریاض سہیل کے مطابق سردار عطااللہ مینگل نے کہا ہے کہ آغازِ حقوق بلوچستان ایک بڑا جھوٹ، فریب اور مکر ہے، جس کا مقصد لوگوں کو دھوکہ دینا ہے، وہ اپنے لیے کچھ فنڈ جاری کرتے ہیں اوپر ہی اوپر سے کھا جاتے ہیں لوگوں تک کچھ نہیں پہنچتا۔‘
    آغازِ حقوق بلوچستان ایک بڑا جھوٹ، فریب اور مکر ہے، جس کا مقصد لوگوں کو دھوکہ دینا ہے، وہ اپنے لیے کچھ فنڈ جاری کرتے ہیں اوپر ہی اوپر سے کھا جاتے ہیں لوگوں تک کچھ نہیں پہنچتا
    سردار عطا اللہ مینگل
    بلوچستان کے وزیرِ اعلیٰ نواب اسلم رئیسانی نے پچھلے دنوں کہا تھا کہ بلوچستان کو قوم پرستوں کے رویوں کے باعث نقصان پہنچ رہا ہے۔
    سردار عطااللہ کا کہنا تھا کہ اس میں کوئی شک نہیں ہے کہ قوم پرستوں کے رویوں اور غلطیوں کے باعث کچھ نقصان ہوا ہے، لیکن وزیر اعلیٰ اپنے حصے کی بھی تو غلطیاں بھی گن لیں۔
    عطا اللہ مینگل نے کہا کہ پاکستان کی فوج پنجاب کی فوج بنی ہوئی ہے۔’ کراچی میں سینکڑوں لوگ مرتے ہیں مگر کبھی فوج کو ناراض ہوتے ہوئے دیکھا ہے، وہاں پولیس یا رینجرز کارروائی کرتی ہے مگر بلوچستان میں تو پوری فوج اور آئی ایس آئی متحرک ہے۔‘
    عطا اللہ مینگل نے کہا کہ دن دھاڑے بےگناہ لوگوں کو ُاٹھا کر ان پر تشدد کرکے لاشیں عید کے دن پھینک دیتے ہیں۔
    سابق فوجی صدر جنرل پرویز مشرف کے دور حکومت میں سردار عطااللہ مینگل کے فرزند اور بلوچستان نیشنل پارٹی کے سربراہ اختر مینگل کو گرفتار کیا گیا اور ان کی رہائی پاکستان پیپلز پارٹی کی موجودہ حکومت میں ہوئی، جسے مفاہمتی پالیسی قرار دیا گیا۔
    سردار عطااللہ کا کہنا ہے کہ اگر حکومت اس پر پشیمان ہے تو وہ ضامن ہیں اور اختر کو واپس لا دیتے ہیں حکومت انہیں دوبارہ بند کردیں۔
    بلوچستان نیشنل پارٹی کی طرف سےانتخابی سیاست میں حصہ لینے سے متعلق انہوں نے کہا کہ وہ چاہتے ہیں کہ سیاست میں حصہ لیں لیکن ان کے لیے سارے دروازے بند کردیے گئے
    ارسال شده توسط مسلم دالبندینی در ۷:۴۹ بعدازظهر هیچ نظری موجود نیست:
    IAEA نے ایران کی ممکنہ جوہری تیاریوں کے بارے میں تشویش کا اظہار کیا

    ویانا…بین الاقوامی ادارہ برائے جوہری توانائی IAEA کا کہنا ہے کہ ایران نے یورینیم افزودہ کرنے کا کام عارضی طور پر روک دیا ہے۔

    ادھر مغربی ممالک کا کہنا ہے کہ ایسا کسی فنی خرابی کی وجہ سے کیا گیا ہے۔IAEA کی رپورٹ میں یورینیم افزودہ کرنے کا کام روکنے کی کوئی وجہ نہیں بتائی گئی ہے۔

    پروگرام معطل ہونے کے باوجود IAEA نے ایران کی ممکنہ جوہری تیاریوں کے بارے میں تشویش کا اظہار کیا ہے۔

    رپورٹ میں کہا گیا ہے کہ ایران میں یورینیم افزودہ کرنے کی پیداوار تین ٹن سے تجاوز کرگئی ہے۔

    ماہرین کا ماننا ہے کہ اتنی تعداد سے کم از کم دو بم بنائے جاسکتے ہیں۔

    ادھر ماہرین کا کہنا ہے کہ Stuxnet کمپیوٹر وائرس کا اخراج ریاستی کارروائی لگتی ہے۔

    اس میں اسرائیل یا کسی اور ایران مخالف ملک کا ہاتھ ہوسکتا ہے۔

    وائرس کے اخراج کا مقصد ایرانی جوہری منصوبے کو نقصان پہنچانا ہے۔

    دوسری طرف ایران کے جوہری پروگرام کے سربراہ کا کہنا ہے کہ جوہری پروگرام جاری ہے۔

    آئندہ ماہ ایران اور چھ عالمی طاقتوں کے درمیان مذاکرات ہورہے ہیں۔

    ارسال شده توسط مسلم دالبندینی در ۱۰:۲۵ قبل‌ازظهر هیچ نظری موجود نیست:
    سه‌شنبه، نوامبر ۲۳، ۲۰۱۰

    زاھدان میں ایرانی دہشت گرد شیعہ حکومت نے تین نوجوان سنی شہید کر دیا۔

    زاھدان کے علاقے نصرت آبادمیں تین سنی نوجوان تفریح کےلیے جا رہے تھے کہ راستے میں ایرانی مشرک کفارفوجی کتوں نے فاہر کر کے ایک سنی جوان شہید جبکہ دو زخمی ہوا ۔
    ایرانی کتے فوجی اسلام کے دشمن ہیں اور ہر روز بلوچ قوم پر ظلم کرتا رہا ہے ۔

    ایرانی مشرک کافر کتوں کا علاج بس صرف جنداللہ اور جند اللہ کے فدای ہیں.

    daljan
    ارسال شده توسط مسلم دالبندینی در ۹:۰۴ بعدازظهر هیچ نظری موجود نیست:
    آپ صلی اللہ علیہ وسلم فرماتے ہیں

    آپ صلی اللہ علیہ وسلم فرماتے ہیں
    بُعِثتُ یَبنَ یَدَیِ السَّاعَةَ مَعَ السَّیفِ وَ جُعِلَ رِذقِی تَحتَ ظِلِّ رُمحِی وَجُعِلَتِ الذِّلَّةُ وَالصِّغَارُ عَلیٰ مَن خَالَفَ اَمرِی وَمَن تَشَبَّہَ بِقَومٍ فَھُوَ مِنھُم
    مجھے قیامت تک تلوار دے کر بھیجا گیا ہے اور میرا رز ق نیزے کے سائے کے نیچے رکھ دیا گیا ہے.
    اور ذلت و رسوائی ان لوگوں کا مقدر ٹھہرادی گئی ہے جو میرے حکم ( جہاد) کی مخالفت کریں اور جو کسی قوم کی مشابہت کرے تو وہ انہی میں سے ہے-
    غور فرمائیے ! اللہ کے رسول صلی اللہ علیہ وسلم سے بڑھ کر بھلا کس کا رزق پاکیزہ تر ہوسکتا ہے اور آگاہ ہو جانا چاہئے !

    کہ جو آ پ صلی اللہ علیہ وسلم کا رزق ہے تو وہ نیز ے کی انی میں ہے یعنی اس سے کفار کے سینے چھیدے جائیں گے ‘پیٹ پھاڑے جائیں گے ‘

    ان کے وجود سے اللہ کی زمین کو پاک کیا جائے گا اور پھر مجاہدین ان کی عورتوں کو لونڈیاں بنائیں گے اور ان کی جائیدادوں کے مالک بنیں گے-

    اور جو لوگ ذلیل و خوار ہوں گے – کفار ان کی عزتیں پامال کریں گے اور ان کے دینی شعار کو ملیا میٹ کریں گے –
    چنانچہ یہ بات سمجھ لینی چاہئے کہ اس امت کے لئے جہاد جاری رکھنے کا حکم قیامت تک کے لئے ہے .

    آخری دور میں جناب عیسیٰ علیہ السلام آئیں گے تو وہ بھی دجال کے خلاف جہاد کریں گے اور دین اسلام کو غالب کریں گے.

    لہٰذا اب جو شخص اس جہادی حکم کے برعکس غلبہ اسلام کا کوئی طریقہ تلاش کرے –

    غیر قوموں کی مشابہت کرتے ہوئے ان کا منہج اختیار کرے –

    تووہ جس کی مشابہت کررہا ہے اس کا تعلق بھی انہی سے ہے اگرو ہ جمہوری طریق کار کو اپنا منہج بنا رہا ہے تو وہ عیسائیوں اورصلیبیوں کی مشابہت کررہا ہے .

    اسی طرح اگر وہ مسلمانوں کا طریق کار اپناتا تولا محالا جہاد کو اختیار کرتا –

    اس لئے کہ یہ طریق کار مسلمان امت کا ہے جو کہ مجاہد امت ہے اورجس کی عزت وقار اور معیشت ورزق کا انحصار جہاد میں مضمر ہے-
    صحیح بخاری میں حضرت عمر رضی اللہ عنہ کی روایت کے مطابق اللہ کے رسول کا جورزق تھا تو وہ یہودی قبیلے ” بنینضیر ‘ ‘ سے حاصل کئے گئے ” مال فئے“ پہ مشتمل تھا اس مال سے اللہ کے رسول صلی اللہ علیہ وسلم اپنے اہل عیال پہ خرچ کرتے اور جو باقی بچتا اسے اللہ کے راستے میں جہاد کی تیاری پر خرچ کردیتے-
    ذرا ملاحظہ تو کیجئے ! مسلمانوں کا حال- کہ جب وہ ہجرت کرکے مدینے میںآئے تھے تو ان کی فاقہ کشی کا یہ حال تھا کہ کئی کئی دن تک ان کے چولھوں میں آگ نہ جلتی تھی۔

    اور انہوں نے جہاد بھی شروع کیا تو حالت یہ تھی کہ سفر میں بسا اوقات انہیں دن بھر کے لئے ایک ایک کھجور فی مجاہد نصیب ہوتی۔

    اور بسا اوقات یہ بھی نہ ملتی تو پتے کھانے پڑتے او رات پتوں کی وجہ سے ان کی قضائے حاجت یوں ہوتی جیسے بکری مینگنیاں کرتی ہے –

    مگر اس کے باوجود مسلمانوں نے جہاد کیا اور متواتر جہاد کیا حتیٰ کہ اس جہاد ہی کی برکت سے اللہ نے انہیں مالامال کردیا۔

    ا ور ایک وہ وقت بھی آیا کہ اللہ کے رسول صلی اللہ علیہ وسلم نے مدینے میں اعلان کر ادیا –

    کہ اب جو کوئی مقروض مرے گا تو اس کا قرض اللہ کے رسول صلی اللہ علیہ وسلم ادا کریں گے۔

    اور جوکوئی اس حال میں فوت ہوا کہ اس کے اہل عیال کی گزران کے لئے کچھ نہ ہو تو ان یتیموں او ربیواوں کی پرورش بھی حکمران مدینہ محمد صلی اللہ علیہ وسلم کریں گے-

    غور کیجئے! یہ فراوانی کہاں سے آئی ؟ یقینا یہ فراوانی جہا د کی برکت سے کفار کے مال چھیننے سے آئی جو غنیمت بن کر مسلمانوں کے ہاتھ میں آیا۔

    دالبندین آنلاین

    ارسال شده توسط مسلم دالبندینی در ۴:۵۱ بعدازظهر هیچ نظری موجود نیست:
    بلوچستان میں صحافی کے قتل کی تحقیقات

    صحافیوں کے تحفظ کے لیے کام کرنے والی ایک بین الاقوامی تنظیم نے کہا ہے کہ وہ ایک پاکستانی صحافی لالہ حمید بلوچ کی جنوب مغربی صوبے بلوچستان میں ہلاکت کی تحقیقات کر رہی ہے۔
    امریکی شہر نیو یارک میں قائم کمیٹی ٹو پروٹیکٹ جرنلسٹس (سی پی جے) کا پیر کے روز کہنا تھا کہ حمید بلوچ کی گولیوں سے چھلنی لاش جمعرات کے روز تربت شہر کے نواحی علاقے سے ایک اور شخص کی لاش کے ساتھ ملی تھی۔
    مقامی صحافیوں کا ماننا ہے کہ حمید بلوچ کو پاکستانی سکیورٹی فورسز نے 25 اکتوبر کو اُس وقت حراست میں لے لیا تھا جب وہ تربت سے اپنے آبائی علاقے گوادر جا رہے تھے۔
    پاکستانی صحافیوں کی ایک نمائندہ تنظیم پی ایف یو جے کے سابق سربراہ مظہر عباس نے بتایا ہے کہ حمید بلوچ اردو اخبار ”ڈیلی انتخاب“ سے وابستہ تھے اور کئی دیگر خبر رساں اداروں کے لیے بھی انفرادی حیثیت سے کام کر رہے تھے۔
    یہ واضح نہیں ہو سکا ہے کہ آیا حمید بلوچ کو اُن کی پیشہ ورانہ ذمہ داریوں کی وجہ سے نشانہ بنایا گیا۔
    سی پی جے نے حمید بلوچ کے پیشے کو مد نظر رکھتے ہوئے پاکستانی حکام سے اس واقع کی تحقیقات کا مطالبہ کیا ہے۔
    اس سے قبل رواں سال بلوچستان کے دارالحکومت کوئٹہ میں الگ الگ واقعات میں دو صحافی مارے گئے تھے۔

    ارسال شده توسط مسلم دالبندینی در ۱۰:۲۹ قبل‌ازظهر هیچ نظری موجود نیست:

    گیمبیا کا ایران کے ساتھ تمام تعلقات توڑنے کا اعلان

    گیمبیا نے ایران کے ساتھ ہر طرح کے سیاسی، معاشی اور سفارتی تعلقات منقطع کرنے کا اعلان کیا ہے۔
    اس مغربی افریقی ملک کی وزارت خارجہ کی جانب سے اس فیصلے کی کوئی وجہ نہیں بتائی گئی۔
    گیمبیا کی وزارت خارجہ کی طرف سے اس فیصلے کے حوالے سے جاری کیے جانے والے بیان میں کہا گیا ہے،
    ایران کے تعاون سے گیمبیا میں جاری تمام حکومتی پراجیکٹس اورپروگراموں کو فوری طور پر منقطع کیا جارہا ہے۔’
    گیمبیا کی حکومت نے سفارتی عملے اور ایرانی حکومت کے نمائندوں کو ملک چھوڑنے کے لیے 48 گھنٹے کا وقت دیا ہے۔
    براعظم افریقہ کا چھوٹا ترین ملک کہلانے والے گیمبیا کی طرف سے ایران کے ساتھ تعلقات منقطع کرنے کی کوئی وجہ نہیں بتائی گئی۔
    ایران اس ملک میں جاری کئی ترقیاتی منصوبوں میں تعاون کررہا ہے۔
    گیمبیا کی وزارت خارجہ کی طرف سے جاری ہونے والے بیان میں مزید کہا گیا ہے، ’گیمیبا کی حکومت درخواست کرتی ہے کہ ایسے تمام ایرانی شہری جو ایران حکومت کی نمائندگی کررہے ہیں وہ ایران حکومت کو جاری کیے جانے والے اس نوٹس کے 48 گھنٹوں کے اندر اندر گیمبیا چھوڑ دیں۔
    نائجیریا کی خفیہ ایجنسی نے گزشتہ ماہ لاگوس میں غیرقانونی ہتھیاروں کی ایک کھیپ پکڑی تھی، جس میں راکٹ سمیت دیگر اسلحہ شامل تھا۔
    نائجیریا کی طرف سے دعویٰ کیا گیا تھا کہ دستاویزات کے مطابق یہ ہتھیار دراصل گیمبیا روانہ کیے جانے تھے۔
    نائجیریا نے اس واقعے کی اطلاع اقوام متحدہ کی سکیورٹی کونسل کو بھی دی تھی۔
    خبر رساں ادارے روئٹرز نے گیمبیا کی وزارت خارجہ کے قریبی ذرائع کے حوالے سے کہا ہے کہ مذکورہ فیصلے کا تعلق ہتھیاروں کے اسی معاملے سے ہے۔
    روئٹرز نے سفارتی اور سکیورٹی ذرائع کے حوالے سے مزید لکھا ہے کہ غیرقانونی ہتھیاروں کے حوالے سے جاری تفتیشی عمل کا مرکز دو ایرانی باشندے ہیں،
    جن کے بارے میں شبہ ہے کہ وہ ایرانی انقلابی گارڈز کے سینیئر اہلکار ہیں۔
    نائجیریا کی خفیہ ایجنسی کے اہلکاروں نے ان میں سے ایک ایرانی شہری سے تفتیش بھی کی تھی۔
    بعد میں اس فرد نے نائجیریا کے دارالحکومت ابوجہ میں قائم ایرانی سفارت خانے میں پناہ لے لی تھی۔
    تاہم دوسرے ایرانی شہری سے تفتیش نہیں کی جاسکی کیونکہ اسے سفارتی تحفظ حاصل تھا۔
    ارسال شده توسط مسلم دالبندینی در ۱۰:۱۴ قبل‌ازظهر هیچ نظری موجود نیست:
    ایران جنداللہ کے خوف سے پریشان

    وَاعِدُّولَھُم مَّااستَطَعتُم مِّن قُو

  8. A very though provoking article. Keep it up. Wahabi agenda in Pakistan should be defeated to save Pakistan.