اسلام کے خلاف سپاہ صحابہ کے تکفیری دیوبندیوں کی ایک اور سازش – از ابو الخیر قادری

Did Hazrat (r.a.) Umar die on 1st Muharram?

Takfiri Deobandi militants of Sipah Sahaba celebrate martyrdom of Hazrat Umar on 1 Muharram only to disrupt the Ashura of Muharram in memory of Imam Hussain and other members of the Prophet Muhammad’s (pbuh) family killed by Yazid. According to authentic books of history including Sunni books, Hazrat Umar died on 26 Zil Hajjah, not on 1st Muharram. These Nasibi Deobandis (enemies of Ahle Bait and lovers of Yazid) are enemies of Imam Hussain. See Darul Uloom Deoband’s fatwa in support of Hazrat Yazid http://criticalppp.com/archives/231807

Maulana Muhammad Ishaq (Sunni Ahle Hadith scholar) too have revealed that Hazrat Umar and Hazrat Usman were martryed in Zul Hajjah not in Muharram.

https://www.facebook.com/photo.php?v=349783001785400

تکفیری دیوبندی دہشت گرد جو طالبان اور سپاہ صحابہ کے نام سے پاکستان میں سر گرم ہیں ان کا سنی بریلوی اور معتدل دیوبندی اور سلفی مکاتب فکر سےک کوئی تعلق نہیں یہ انسانیت کے مجرم ہیں اور ان کا کسی بھی دین یا مذھب سے کوئی تعلق نہیں

ایک سنی بریلوی ہونے کے ناتے مجھے بہت صدمہ ہوتا ہے جب میں تکفیری دیوبندی دھشت گردوں کو اہلسنت والجماعت کا نام استعمال کرتے دیکھتا ہوں – ان کو سنی یا اہلسنت والجماعت کا مقدس نام استعمال اور بد نام کرنے کی اجازت ہرگز نہیں ہونی چاہیے بلکہ ان کے ساتھ مفسد فی الارض کا سلوک کیا جائے اور ان کو پھانسی کی سزا دی جائے

پچھلے چند سالوں سے ان تکفیری دہشت گردوں نے ایک اور ڈھونگ رچایا ہے ان میں سب سے بھیانک جرم سابقون الاولون یعنی سب سے پہلے ایمان لانے والے جلیل القدر صحابہ خلفا راشدین اور اہلبیت اطہار کے ساتھ فتح مکہ کے بعد مجبور ہو کر ایمان لانے والے صحابہ جیسا کہ معاویہ کو شامل کرنا ہے جس نے نہ صرف خلیفہ راشد حضرت علی کے خلاف بغاوت کی بلکہ حضرت امام حسن کو زہر دے کر شہید کیا، سینکڑوں صحابہ اور تابعین کو قتل کیا اور یزید پلید کو امت پر مسلط کر کے امام حسین اور اہلبیت رسول کی شہادت کی رہ ہموار کر دی – نماز جمعہ کے خطبہ میں بر سر منبر حضرت علی پر لعنت بھیجنے کے قبیح عمل کو رائج کیا اور اولین گستاخین صحابہ میں شامل ہوا

کہاں یار غار ابو بکر صدق اور کہاں فتح مکہ کے آزاد کردگان
کہاں فاروق اعظم حضرت عمر اور کہاں اسلام میں ملوکیت رائج کرنے والا خطاکار
کہاں عثمان غنی اور کہاں یزید کی بیعت کے لئے عبدالرحمن بن ابو بکر ، عبداللہ ابن عمر ، عبدللہ بن زبیر اور حسیں ابن علی کو مجبور کرنے والا شامی بادشاہ
کہاں مولا علی شیر خدا اور کہاں صفین میں شکست کھا کر فریب دینے والا دھوکے باز

تکفیری دیوبندیوں کا ایک اور ڈھونگ یکم محرم کو خلیفہ راشد حضرت عمر فاروق کا یوم شہادت ہے مستند تواریخ کے مطابق حضرت عمر ؓ کی وفات 26 ذی الحج23 ہجری کو ہوئی اور ان کی وفات کے بعد حضرت عثمان ؓ کی بیعت 29 ذی الحج کوہوئی۔

(۱) طبقات ابن سعد جلد ۳، ص ۱۴۷ مطبوعہ کراچی۔
(۲) تاریخ طبری جلد ۳، ص ۲۳۵ مطبوعہ کراچی۔
(۳) تاریخ ابن خلدون جلد۱، ص ۳۸۴ مطبوعہ کراچی۔
(۴) تاریخ المسعودی جلد ۲، ص ۲۴۰ مطبوعہ کراچی۔
(۵) تاریخ ابن کثیر جلد ۷، ص ۲۷۹ مطبوعہ کراچی۔
(۶) Al Farooq, Muhammad Husayn Haykal. chapter no: Death of Umar

و دیگر۔۔

سپاہ صحابہ اور طالبان کے تکفیری دیوبندی حضرت عمر کے بھی دشمن ہیں اور حضرت امام حسین کے بھی دشمن ہیں – یہ اصل میں اولاد یزید ناصبی ہیں جن کا دین آل محمد سے نفرت اور عداوت پر مبنی ہے یکم محرم الحرام کو نقلی یوم شہادت حضرت عمر منانے سے ان کا اصلی مقصد عاشورہ محرم میں حضرت امام حسین کی یاد میں رکاوٹ ڈالنا اور پاکستان میں فساد برپا کرنا ہے یہ سنی اور شیعہ میں جھگڑا کروانا چاہتے ہیں

یہ اگر مخلص ہیں تو سنی بریلویوں اور شیعہ مسلمانوں کے ساتھ مل کر بارہ ربیع الاول کو عید میلاد النبی میں شرکت کریں اور عید میلاد النبی کے دشمنوں پر لعنت کریں دودھ کا دودھ پانی کا پانی ہو جائے گا

Latest Comments
  1. atta
    Reply -
  2. Muhammad Muawiyah Jhangvi Deobandi
    Reply -
  3. Muhammad Muawiyah Jhangvi Deobandi
    Reply -
  4. Awais
    Reply -
  5. Raza Ali
    Reply -
  6. Karar Haider
    Reply -
  7. Muhammad
    Reply -
  8. umer farooq
    Reply -
  9. Jangwi
    Reply -
  10. Jangwi
    Reply -
  11. A.A jihadi
    Reply -
  12. A.A jihadi
    Reply -
  13. رضا خان
    Reply -
  14. saima
    Reply -
  15. kalim
    Reply -

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

You may use these HTML tags and attributes: <a href="" title=""> <abbr title=""> <acronym title=""> <b> <blockquote cite=""> <cite> <code> <del datetime=""> <em> <i> <q cite=""> <strike> <strong>

Current ye@r *